4

جامعہ باقر العلوم علی پور میں خادم القرآن مولانا سید باقر حسین نقوی کے چہلم کا انعقاد، علماء اور طلاب کی بھرپور شرکت

  • News cod : 56193
  • 21 ژوئن 2024 - 18:41
جامعہ باقر العلوم علی پور میں خادم القرآن مولانا سید باقر حسین نقوی کے چہلم کا انعقاد، علماء اور طلاب کی بھرپور شرکت
محسن ملت علامہ سید صفدر حسین نجفی رح کے چھوٹے بھائی بزرگ عالم دین خادم القرآن حجت الاسلام و المسلمین مولانا سید باقر حسین نقوی مرحوم کی رسم چہلم کی مجلس ترحیم و تجلیل کا انعقاد کیا گیا۔

وفاق المدارس الشیعہ پاکستان کے بانی محسن ملت علامہ سید صفدر حسین نجفی رح کے چھوٹے بھائی بزرگ عالم دین خادم القرآن حجت الاسلام و المسلمین مولانا سید باقر حسین نقوی مرحوم کی رسم چہلم کی مجلس ترحیم و تجلیل کا انعقاد مورخہ 20 جون بروز جمعرات کو ان کے آبائی وطن میں ان کی تاسیس کردہ دینی درسگاہ جامعہ باقر العلوم علی پور میں ہوا۔

مجلس میں مختلف علمی مذہبی تنظیمی شخصیات خصوصاً ان کے شاگردوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی اور ان دینی قرآنی خدمات کا مفصل تذکرہ کرتے ہوئے انہوں خراجِ عقیدت پیش کیا۔

تفصیلات کے مطابق، حجت الاسلام و المسلمین مولانا فیاض حسین اسدی، حجت الاسلام و المسلمین مولانا مومن حسین قمی، معروف خطیب واعظ مولانا خادم حسین گھاگھری اور حجت الاسلام و المسلمین مولانا اعجاز حسین شاکری نے خطاب میں آپ کی علمی خدمات کو شاندار الفاظ میں بیان کیا۔

مولانا مومن حسین قمی کا کہنا تھا کہ علامہ سید باقر حسین نقوی مرحوم نے اپنی پوری زندگی قرآن حکیم کی خدمت میں گزاری اور ایک بہترین مربی ہونے کے ساتھ ساتھ ایک اچھے اور با صلاحیت مدیر تھے ان میں خدمت دین کا جزبہ تھا ہمیشہ سادگی کو ترجیح دی اور بڑی تعداد میں طلاب کی تربیت کی۔

مولانا خادم حسین گھاگھری نے بیان کیا استاذ العلماء کے شاگردوں میں علامہ باقر نقوی اپنی مثال آپ تھے استاد العلماء جن پہ بہت زیادہ یقین رکھتے تھے وہ مولانا سید باقر حسین نقوی مرحوم تھے۔

اس موقع پع مولانا فیاض اسدی نے کہا کہ استاد بزرگوار کی شفقت ان کا انداز تربیت انتہائی منفرد تھا جو نیا طالب علم آتا اسے بھرپور توجہ دیتے تاکہ بچہ علم دین کی طرف راغب ہو ہمیشہ واجبات کی اداگی پہ توجہ دلاتے نماز شب اور ظہرین کے نوافل پہ خصوصی توجہ ہوتی
انہوں نے اپنی 90 سالہ پربرکت زندگی قرآن حکیم کی خدمت میں گزاری جوکہ یقینا آپ کے لیے نجات کا ذریعہ بنے گی۔

مختصر لنک : https://wifaqtimes.com/?p=56193