13

روزبعثت پیغمبر ص اور ظہور امام مہدی عج

  • News cod : 13302
  • 12 مارس 2021 - 14:28
روزبعثت پیغمبر ص اور ظہور امام مہدی عج
جس طرح نبی اکرم (ص) اصحاب اور انصار کی مدد کے بغیر الہی حکومت نافذ نہیں کر سکتے تھے اسی طرح مہدی عج بھی آج اپنے انصار ، یار اور خالص مومنین کا منتظر ہے

تحریر: حجت الاسلام و المسلمین علی اصغر سیفی 

27 رجب 13 ہجری ، جب پیغمبر اکرم (ص) ابھی مکہ مکرمہ میں عبادت الہی اور خدمت خلق میں مصروف تھے ، خدا کے ذریعہ انھیں نبوت کے لئے مبعوث کیا گیا تھا۔ اس وقت ، حضور اکرم (ص) چالیس سال کے تھے اور لوگوں کو ہدایت دینے کے لیے تیار تھے آپ اس وقت لوگوں میں امین اور صادق کے عنوان سے معروف تھے۔

حضرت جبرائیل کے الہی نزول کے بعد ، الہی آیات کا پہنچنا اور رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا منصب نبوت پر فائز ہونا عظیم اہداف رکھتا تھا جیسے؛ توحید کی دعوت ، عدل و انصاف کے قیام کے لئے جدوجہد ، جہالت اور توہم پرستی کا مقابلہ کرنا ، فکر و فکر کی سطح کو تقویت بخش اور بلند کرنا ، لوگوں میں اختلافات کو دور کرنا اور ان میں اتحاد اور ہمدلی پیدا کرنا۔
بالآخر نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم جزیرۃ العرب میں عادلانہ حکومت کو قائم کرنے میں کامیاب ہوئے ہوئے اور الہی دین کو نافذ کیااور ان اہداف کو حاصل کیا۔
آج ان کا فرزند اور آخری محمد امام مہدی عج الھی اذن کے منتظر ہیں کہ ساری دنیا پر شریعت محمد (ص) کو نافذ کرے اور اسی عادلانہ حکومت کو شرق و غرب پرقائم کرے جس کا آغاز نبی اکرم اور اس کے بعد امیرالمومنین صلوٰۃ اللہ علیہم نے کیا تھا۔اور انہیں اہداف کو عالمگیر سطح پر حاصل کریں۔
اصلی نکتہ یہ ہے کہ جس طرح نبی اکرم (ص) اصحاب اور انصار کی مدد کے بغیر الہی حکومت نافذ نہیں کر سکتے تھے اسی طرح مہدی عج بھی آج اپنے انصار ، یار اور خالص مومنین کا منتظر ہے تاکہ ان کے ذریعے عالمی سطح پر عالمگیر حکومت کو بپا کرے۔
ایسی حکومت کے جس کے بارے میں پروردگار نے قرآن کی دسیوں آیات میں وعدہ کیا ہے ہے اس حوالے سے سورہ نور کی آیت 55 کا ضرور مطالعہ کریں۔

مختصر لنک : https://wifaqtimes.com/?p=13302